تفصیلات
نقشے

وسطی یورپ میں یہودی حلقے

جرمنی میں آباد 80 فیصد یہودی (تقریبا 400000 افراد) جرمن شہریت رکھتے تھے۔ باقی زیادہ تر یہودی پولش شہریت رکھتے تھے۔ ان میں سے ایسے کئی افراد بھی تھے جو جرمنی میں پیدا ہوئے تھے اور جن کے پاس جرمنی میں رہنے کے لئے مستقل رہائشی حیثیت حاصل تھی۔ مجموعی طور پر جرمنی کے تقریبا ستر فیصد یہودی شہری علاقوں میں رہتے تھے۔ جرمنی میں پچاس فیصد یہودی جرمنی کے دس سب سے بڑے شہروں میں رہتے تھے۔ یہودی آبادی کے سب سے بڑے مراکز برلن (تقریبا ایک لاکھ 60 ہزار)، فرینکفرٹ ایم مین (تقریبا 26 ہزار)، بریسلاؤ (تقریبا 20 ہزار)، ہیمبرگ (تقریبا 17 ہزار)، کولون (تقریبا 15 ہزار)، ہینوور (تقریبا 13 ہزار) اور لیپزگ (تقریبا 12 ہزار) تھے۔ 10،000 سے زائد یہودی ڈانزگ کے آزاد شہر میں رہتے تھے۔ آسٹریا میں رہنے والے یہودیوں کی اکثریت ایک لاکھ 78 ہزار کے قریب افراد، دارالحکومت کے شہر ویانا میں رہتے تھے۔ چیکوسلواکیا میں یہودیوں کی سب سے بڑی برادری جن کی تعداد تقریبا 35،000 تھی، دارالحکومت پراگ میں رہتی تھی۔


  • US Holocaust Memorial Museum

شیئر کریں

Jewish communities in central Europe [LCID: ger77170]

Thank you for supporting our work

We would like to thank The Crown and Goodman Family and the Abe and Ida Cooper Foundation for supporting the ongoing work to create content and resources for the Holocaust Encyclopedia. View the list of all donors.