تفصیلات
Other

ویسٹربورک ٹرانزٹ کیمپ کا ہاتھ سے بنایا ہوا خاکہ

ڈچ حکومت نے ان یہودی پناہ گزینوں کو قید کرنے کے لئے ویسٹربورک میں ایک کیمپ قائم کیا جو غیر قانونی طور پر نیدرلینڈ میں داخل ہو گئے تھے۔ ویسٹربورک کے اس ٹرانزٹ کیمپ کا خاکہ کیمپ کے ایک یہودی مکین نے بنایا تھا جو امریکہ ہجرت کرنے میں کامیاب ہو گیا۔ 1942 کے شروع میں، جرمن قابض حکام نے ویسٹربورک کو وسیع کرنے اور اس کو یہودیوں کیلئے ٹرانزٹ کیمپ میں تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا۔ نیدرلینڈ سے ویسٹربورک میں یہودیوں کی منظم منتقلی جولائی 1942 میں شروع ہوئی۔ ویسٹر بورک سے یہودیوں کو جرمنی کے مقبوضہ پولینڈ کے قتل کے مراکز میں بھجوا دیا جاتا تھا۔


  • US Holocaust Memorial Museum - Collections

Share This

Hand-drawn plan of Westerbork transit camp [LCID: 1998m9u3]